رجیم چینج کی سازش جاری ہے، پارٹی توڑنے کا پلان بنایا گیا ہے،عمران خان

1 month ago 118

چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کا کہنا ہے کہ رجیم چینج کی سازش اب بھی جاری ہے، انہوں نے ہماری پارٹی کو توڑنے کا پلان بنایا ہے۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس کے دوران عمران خان کا کہنا تھا کہ فارن فنڈنگ کیس میں کچھ بھی نہیں ہے، ہماری جماعت نے سیاسی فنڈریزنگ کی مگر جو پاکستانی پیسے دیتے ہیں ان کو غیرملکی بنا دیا گیا۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کے بھیجے گئے پیسے کو فارن فنڈنگ کہا جارہا ہے،2012 میں پاکستان کے رائزنگ اسٹار کا نام عارف نقوی تھا، بل گیٹس بھی عارف نقوی کے فنڈ میں پیسے دیتا تھا۔

چیئرمین تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ کرپٹ جماعتیں کبھی فنڈریزنگ نہیں کرسکتیں۔ سرٹیفکیٹ کے اوپر مجھے نا اہل کرانے کی کوشش کی جارہی ہے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ سازش کی جارہی ہے کہ ملک کی سب سے بڑی جماعت کو فوج سے لڑایا جائے، پی ٹی آئی اور فوج کو لڑانے کی کوشش کی جارہی ہے۔

سابق وزیراعظم کا کہنا تھا کہ یہ سب سے زیادہ کہتے تھے کہ عمران خان فوج کی کٹھ پتلی ہے، بھارت کہتا تھا عمران خان فوجی پتلا ہے، بھارت کو تکلیف تھی کہ فوج اورحکومت ایک پیج پر ہے۔

انہوں نے کہا کہ رجیم چینج کی سازش اب بھی جاری ہے، آج یہ بتایا جارہا ہے کہ ہم فوج مخالف ہیں اور یہ لوگ محب وطن ہیں۔

عمران خان کا کہنا ہے کہ ایک پارٹی جو پورے پاکستان سے ووٹ لے کر اقتدار میں تھی، اگر ایسی پارٹی کو فوج کے لڑوایا گیا تو اس کے خطرناک نتائج ہوں گے۔

سابق وزیراعظم کا کہنا تھا کہ جب مجھے نکالا گیا تو عوام سڑکوں پر نکل آئی، انھیں لگتا تھا ہمارے حمایتیوں کو چپ کروا دیں گے، لیکن ایسا نہیں ہو سکا۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ اب ان کی کوشش ہے کہ عمران خان کی کردار کشی کی جائے، ابھی یوٹیوبرز اور سوشل میڈیا کے خلاف بھی کارروائی کی جائے گی، آپ صرف ملک کا نقصان کر رہے ہیں،ملک کا سوچنا چاہیے۔

چیئرمین تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ مجھے نہیں پتہ کہ پاکستان کی فضائی حدود استعمال ہوئی ہے یا نہیں لیکن بیرون ملک کے اخباروں نے فضائی حدود کے استعمال کا لکھا ہے، انہوں نے کہا کہ ہم خیبرپختونخوا میں ٹی ٹی پی کی ایکٹیوٹی دیکھ رہے ہیں، ہمارے لوگوں کو دھمکیاں مل رہی ہیں، یہ بھی ہماری پارٹی کو ختم کرنے کے لیے ایک سازش ہے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ شہباز گل نے جو کہا وہ قانون کے خلاف تھا تو چارج لگاتے، ہر انسان کو صفائی کا موقع ملنا چاہیے ، مزید کہا کہ سازش کرکے ہمارے لوگوں کو توڑنے کی کوشش کی جارہی ہمارے پاس اسٹریٹ پاور ہے،ملک بند کرسکتے ہیں مگر ہم معاشی حالات اچھے نہیں، ہم ملک کا سوچتے ہیں۔

چیئرمین تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ ہے پاکستان کو اس وقت سیاسی استحکام کی ضرورت ہے، ملک کو مشکل سے نکالنے کے لیے صاف شفاف الیکشن ناگزیر ہے۔

Read Entire Article