اینٹی انکروچمنٹ حکام نے حلیم عادل شیخ کو حراست میں لے لیا

1 month ago 75

کراچی : اینٹی انکروچمنٹ حکام نے ضمانت منسوخی کے بعد پی ٹی آئی رہنما حلیم عادل شیخ کو حراست میں لے لیا، حلیم عادل شیخ پر سرکاری زمین پر قبضے کا الزام ہے۔

تفصیلات کے مطابق اینٹی انکروچمنٹ ٹربیونل میں اپوزیشن لیڈر سندھ اسمبلی حلیم عادل شیخ کے خلاف کیس کی سماعت ہوئی۔

اینٹی انکروچمنٹ حکام نے عدالت کو بتایا کہ ملزم حلیم عادل شیخ تحقیقات میں شامل نہیں ہورہے ہیں ،12 نوٹسز کے باوجود حلیم عادل شیخ بیان ریکارڈ کرانے نہیں آئے۔

عدالت نے اینٹی انکروچمنٹ حکام اور ملزم کے وکیل کے دلائل سننے کے بعد حلیم عادل شیخ کی ضمانت منسوخ کردی۔

ضمانت منسوخی کے بعد اینٹی انکروچمنٹ حکام نے حلیم عادل شیخ کو حراست میں لے لیا۔

اینٹی انکروچمنٹ حکام کے مطابق حلیم عادل شیخ پر سرکاری زمین پر قبضہ کا الزام ہے۔

یاد رہے رواں ماہ کے آغاز میں سندھ ہائی کورٹ نے حلیم عادل شیخ کی گرفتاری پر اینٹی کرپشن حکام پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا تھا کہ نوکری کریں، کسی کی غلامی نہ کریں، ، جن کی غلامی کررہےہیں، وقت بدلنے پر وہ پہچانیں گے بھی نہیں ، اپنی نوکری کا خیال رکھیں،جو کچھ آپ کرریے ہیں وہ نوکری نہیں غلامی ہے۔

Comments

Read Entire Article