پیٹرول کی قیمت میں 50روپے فی لیٹرتک اضافے کی تجویز

3 days ago 11

حکومت نے عوام پر پیٹرول بم گرانے کی تیاری کرلی، 16 مئی سے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں 31 سے 85 روپے فی لیٹر تک بڑے اضافے کا خدشہ ہے، اوگرا نے کاغذی کارروائی مکمل کرلی۔ حتمی فیصلہ وزیراعظم  شہباز شریف کی اجازت کے بعد کیا جائے گا۔

ذرائع کے مطابق اوگرا کی جانب سے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کیلئے دو الگ الگ سمریاں تیار کرلی گئیں، 16 مئی سے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں 31 سے 85 روپے فی لیٹر تک اضافے کا امکان ہے۔

اوگرا نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کا ورکنگ پیپر تیار کرلیا، جس میں سبسڈی مرحلہ وار یا مکمل ختم کرنے کی تجویز دی گئی ہے۔

اوگرا کی پہلی تجویز کے مطابق پیٹرول 31 روپے فی لیٹر مہنگا کیا جائے جبکہ ڈیزل کی قیمت بھی 50 روپے فی لیٹر بڑھانے کی سفارش کی گئی ہے۔

ذرائع کے مطابق اوگرا کی دوسری تجویز میں پیٹرول 45.14 روپے اور ڈیزل 85.85 روپے مہنگا کرنے کی سفارش کی گئی ہے۔

اوگرا کی جانب سے بھیجی جانیوالی سمری پر پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں کا حتمی فیصلہ وزیراعظم شہباز شریف کریں گے۔

ترجمان اوگرا عمران غزنوی نے سمری سے متعلق ردعمل دینے سے گریز انکار کردیا۔ ان کاک ہنا ہے کہ سمری کے حوالے سے اوگرا کچھ نہیں بتائے گا، چیئرمین اوگرا کی ہدایت ہے کہ سمری سے متعلق کچھ نہ بتایا جائے۔

WhatsApp FaceBook

Read Entire Article