شہریوں نے گلی محلوں میں قربانی پر پابندیوں کی دھجیاں اڑا دی

1 week ago 38

کراچی : شہریوں نے گلی محلوں میں قربانی پر عائد حکومتی پابندیوں کی دھجیاں اڑا دیں، آلائشوں کے باعث جگہ جگہ گندگی کے ڈھیر لگ گئے۔

تفصیلات کے مطابق صوبہ سندھ کے دارالحکومت کراچی کے مختلف علاقوں سے جانوروں کی آلائشیں اور باقیات تاحال نہ اٹھائی جا سکیں، آلائشوں اور قربانی کے جانوروں کی باقیات سے تعفن اٹھنے لگا۔

سندھ حکومت کی جانب سے شہر کو گندگی اور جراثیم کے پھیلاؤ سے بچانے کےلیے گھروں کے باہر جانور کی قربانی پر پابندی عائد کررکھی تھی لیکن شہر قائد کی عوام نے حکومتی پابندیوں پر چھری چلا دی۔

میدانوں اور رہائشی علاقوں سے دور کسی نے قربانی کا اہتمام نہیں کیا، شہریوں نے انفرادی طور پر گھروں کے باہر قربانی کی جس کی وجہ سے مجمع اکھٹا ہوا جس پر پابندی عائد تھی۔

جگہ جگہ جاور ذبح ہونے کی وجہ سے شہر بھر میں آلائشوں کے باعث جگہ جگہ گندگی کے ڈھیر لگ گئے ہیں۔

کراچی کے علاقے عزیز آباد بلاک 2 اور 8، جناح کالج ناظم آباد، عید گاہ گراؤنڈ میں گندگی کے ڈھیر لگ گئے، جبکہ لیاقت آباد 10 نمبر، گلستان جوہر، غریب آباد اور سخی حسن پر آلائشوں کا انبار لگ گیا۔

مختلف پارکوں کے باہر گندگی کے پہاڑ بن گئے، شہریوں کی جانب سے آلائشیں پھینکے جانے کا سلسلہ جاری ہے۔

Comments

Read Entire Article